صفحه اصلی » خبریں » سیاسی » سلامتی کونسل میں امریکہ کے ویٹو پر فلسطین کا ردعمل

سلامتی کونسل میں امریکہ کے ویٹو پر فلسطین کا ردعمل

شائع کیا گیا 31 دسامبر 2014میں | کیٹیگری : سیاسی
فونٹ سائز

اقوام متحدہ میں فلسطین کے نمائندے نے سلامتی کونسل میں فلسطین پر غاصبانہ قبضے کے خاتمے کی قرارداد کے مسودے کو ویٹو کیئے جانے کے امریکی اقدام کی شدید مذمت کی ہے۔

اقوام متحدہ میں فلسطین کے نمائندے ریاض منصور نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل پر، ملت فلسطین کے حقوق کے حوالے سے اپنے وعدؤں پر عمل نہ کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اب وقت آن پہنچا ہے کہ عالمی برادری، اسرائیل کے غاصبانہ قبضے کے نتیجے میں ملت فلسطین مشکلات و مصائب کے خاتمے کے لئے میدان آئے۔
ریاض منصور نے صہیونیوں کی جانب سے فلسطین کے قبضے کے خاتمے حوالے سے، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی مخالفت کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور کہا کہ سلامتی کونسل، ایک مرتبہ پھر ملت فلسطین کے حوالے اپنے وعدؤں کی انجام دہی میں ناکام رہی ہے۔
واضح رہے کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے، اسرائیل سے تین برس میں فلسطینی علاقے خالی کرنے کے مطالبے پر مبنی قرارداد، امریکی ویٹو کے سبب مسترد کر دی ہے۔
متعلقہ مضامین
کمینٹس

جواب دیں

نشانی ایمیل شما منتشر نخواهد شد. بخش‌های موردنیاز علامت‌گذاری شده‌اند *


4 + دو =