صفحه اصلی » خبریں » آج کا تبصرہ » امام حسین (علیہ السلام) اور قرآن کریم کے درمیان شباہتیں (حصہ اول)

امام حسین (علیہ السلام) اور قرآن کریم کے درمیان شباہتیں (حصہ اول)

شائع کیا گیا 14 نوامبر 2016میں | کیٹیگری : آج کا تبصرہ
فونٹ سائز

اگر قرآن کریم سید الکلام ہے (مجمع البیان، ج2، ص361)؛

تو امام حسین علیہ السلام، سیدالشہداء ہیں۔ (کامل الزیارات)
صحیفہ سجادیہ کی 42 ویں دعا میں قرآن کریم کے متعلق پڑھتے ہیں کہ : “… وَ مِيزَانَ قِسْطٍ “؛

امام حسین علیہ السلام کی زیارت میں پڑھتے ہیں: “… أَشْهَدُ أَنَّکَ أَمَرْتَ بِالْقِسْطِ”؛ میں گواہی دیتا ہوں کہ آپ نے نے عدالت کو برقرار کیا؛
جیسے قرآن کریم خدا کی طرف سے موعظہ ہے، «موعظة من ربکم»(سوره یونس،آیه57)

امام حسین علیہ السلام نے بھی روز عاشور میں فرمایا: ” جلدی نہ کرو، تا کہ تمہیں میں موعظہ کر سکوں” لاتعجلوا حتی اعظکم بما یحق لکم”(لواعج الاشجان،ص26)
قرآن کریم لوگوں کو ہدایت کا راستہ دیکھاتا ہے: «یہدی الی الرشد»(سوره جن،آیه 1)،

امام حسین علیہ السلام نے بھی فرمایا: ” ادعوکم الی سبیل الرشاد” میں تمہِیں سعادت اور ہدایت کی طرف دعوت کرتا ہوں۔ (لواعج الاشجان،ص128)
قرآن عظیم ہے ” و القرآن العظیم”؛  (سوره حجر،آیه 87)

امام حسین علیہ السلام بھی عظیم سوابق کے حامل ہیں۔ “عظیم السوابق” (بحارالانوار، ج98،ص239)

متعلقہ مضامین
کمینٹس

جواب دیں

نشانی ایمیل شما منتشر نخواهد شد. بخش‌های موردنیاز علامت‌گذاری شده‌اند *


+ 6 = نُه