صفحه اصلی » خبریں » سیاسی » اسلام کا تشدد سے موازنہ کرنا درست نہیں؛ پوپ فرانسس

اسلام کا تشدد سے موازنہ کرنا درست نہیں؛ پوپ فرانسس

شائع کیا گیا 01 آگوست 2016میں | کیٹیگری : سیاسی
فونٹ سائز

کیتھولک عیسائیوں کے روحانی پیشوا پوپ فرانسس نے دہشت گردی اور اسلام کے درمیان موازنہ کو غلط قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ: دہشت گردوں کا اسلامی تعلیمات سے کوئی تعلق نہیں، ہر مذہب میں انتہا پسند گروہ موجود ہوتے ہیں اور شدت پسندگروہ عیسائیوں میں بھی موجود ہیں۔

پولینڈ کے دورے سے واپسی پر اپنے طیارے میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پوپ فرانسس کا کہنا تھا کہ اسلام اور تشدد کا آپس میں کوئی تعلق نہیں ہے، اسلام کا تشدد سے موازنہ کرنا درست نہیں ہے۔
انہوں نے کہا کہ عیسائی بھی اتنے ہی خطرناک اور مہلک ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے خبردار کیا کہ یورپ نوجوانوں کو دہشت گردی کی جانب دھکیل رہا ہے۔
ان کا کہنا تھا ہر مذہب میں اس طرح کے بنیاد پرست عناصر محدود تعداد میں ہوتے ہیں۔ اس طرح کے عناصر عیسائیوں میں بھی ہیں اور اگر میں اسلامی شدت پسندی کے بارے میں بات کروں تو پھر مجھے عیسائی شدت پسندوں کے بارے میں بھی بات کرنا ہوگی۔

متعلقہ مضامین
کمینٹس

جواب دیں

نشانی ایمیل شما منتشر نخواهد شد. بخش‌های موردنیاز علامت‌گذاری شده‌اند *


+ دو = 3